تازہ ترین

جاپان: 4 بیویوں اور بچوں والا 10 سال سے بے روزگار شہری

ہوکائیڈو – 4 شادیاں، بچے اور 10 سال سے بے روزگاری کے باوجود خوش باش رہنے کا ہنر جاپان کے ایک شہری نے سیکھ لیا ہے۔ جاپانی میڈیا کے مطابق جزیرے ہوکائیڈو کے 35 سالہ رہائشی ریوتا واتانابے اپنی غیر روایتی طرز زندگی کی وجہ سے کافی مشہور ہوگئے ہیں۔ مبینہ طور پر واتانابے اپنی چار بیویوں میں سے تین کے ساتھ رہتے ہیں جن کے تعلق ایک دوسرے سے بہت اچھے ہیں۔

واتانابے کے 3 بچے بھی ہیں تاہم وہ 10 سال سے بےروزگار ہیں اور انہیں اس کی کوئی پریشانی نہیں۔ کیونکہ ان کی بیویاں نوکری کرتی ہیں اور گھر کا سارا خرچہ ان کی ذمہ داری ہے۔ واتانابے کے پاس پچھلے 10 سالوں سے کوئی نوکری نہیں ہے۔

واتانابے کی اس عجیب و وغریب ازدواجی زندگی کو حال ہی میں جاپان کے AbemaTV نیوز پروگرام میں نشر کیا گیا جس نے عوامی سطح پر گرما گرم بحث کو جنم دیا ہے۔ ایک ایسا ملک جہاں ایک سے زائد شادیوں پر حکومت کی طرف سے پابندی ہے، وہیں واتانابے کی چار بیویاں ملک کے ‘کامن لا ریلیشن شپ’ کے قانون میں آتی ہیں۔

تاہم چاروں بیویوں کی خواہش ہے کہ وہ اپنی شادیوں کو رجسٹر کروائیں اور پھر طلاق لیں تاکہ وہ واتانابے کا نام بچوں کی ولدیت میں شامل کرسکیں۔ چونکہ بچے شادی رجسٹر ہونے سے پہلے کے ہیں لہٰذا شادی کو رجسٹر کروانے اور طلاق کے بعد ہی بچوں کو والد کا نام مل سکتا ہے۔