تازہ ترین

صدارتی الیکشن؛ آصف زرداری اور محمود اچکزئی کے کاغذات نامزدگی منظور

اسلام آباد – اتحادی جماعتوں کے مشترکہ صدارتی امیدوار آصف علی زرداری اور سنی اتحاد کونسل کے صدارتی امیدوار محمود خان اچکزئی کے کاغذات نامزدگی منظور کرلیے گئے ہیں۔

چیف الیکشن کمشنر نے آصف زرداری اور سنی اتحاد کونسل کے صدارتی امیدوار محمود خان اچکزئی کے کاغذات نامزدگی کی اسکروٹنی کی۔

چیف الیکشن کمشنر نے آصف زرداری کے کاغذات نامزدگی منظور کرلیے۔ ایک اور صدارتی امیدوار اصغر علی مبارک نے محمود خان اچکزئی کے کاغذات نامزدگی پر اعتراض عائد کردیا جس پر چیف الیکشن کمشنر نے محمود خان اچکزئی کے کاغذات نامزدگی کی منظوری پر فیصلہ محفوظ کرلیا۔

بعد ازاں الیکشن کمیشن نے صدارتی انتخاب کیلیے امیدواروں کے ناموں کی فہرست آویزاں کی جس کے مطابق آصف زرداری اور محمود خان اچکزئی کے کاغذات نامزدگی منظور کرلیے گئے جبکہ دیگر تمام امیدواروں کے کاغذات کو مسترد کردیا گیا ہے۔

محمود خان اچکزئی کے صدارت کیلئے جمع کرائے گئے کاغذات نامزدگی پر اعتراضات میں کہا گیا تھا کہ محمود اچکزئی نے اسمبلی فلور پر اسٹیبلشمنٹ اور اداروں کے خلاف بیان دے کر آئین پاکستان سے انحراف کیا، انہوں نے کہا کہ الیکشن میں سلیکٹ کرانے کیلئے لوگوں سے 70ارب روپے لئے گئے، لہذا ان کے کاغذات نامزدگی مسترد کئے جائیں۔

فاروق نائیک نے بتایا کہ آصف زرداری کے کاغذات نامزدگی پر کوئی اعتراض عائد نہیں کیا گیا۔ ہمارے پاس نمبر پورے ہیں، آصف زرداری دوسری مرتبہ صدر منتخب ہوں گے۔

واضح رہے کہ مسلم لیگ ن، پیپلزپارٹی، استحکام پاکستان پارٹی، مسلم لیگ ق، بلوچستان عوامی پارٹی، عوامی نیشنل پارٹی کے مشترکہ صدارتی امیدوار آصف علی زدراری ہیں جبکہ پی ٹی آئی – سنی اتحاد کونسل کے امیدوار محمود خان اچکزئی ہیں۔

ایوان میں عدید اکثریت کے حساب سے اتحادی جماعتوں کو برتری حاصل ہے جبکہ جے یو آئی اور ایم کیو ایم نے صدارتی انتخاب میں کسی بھی امیدوار کو ووٹ نہ دینے کا تاحال کوئی فیصلہ نہیں کیا۔