تازہ ترین

پی ٹی آئی کے امیدواروں کو آزاد حیثیت سے انتخابی نشان الاٹ

اسلام آباد – الیکشن کمیشن نے پاکستان تحریک انصاف کے امیدواروں کو آزاد حیثیت میں انتخابی نشانات الاٹ کر دیئے۔ چیئرمین پی ٹی آئی بیرسٹرگوہر علی خان کو چینک کا نشان الاٹ کیا گیا جبکہ شوکت یوسفزئی کو ریکٹ کا نشان مل گیا۔ پارٹی رہنما شہریارآفریدی کو بوتل کے نشان پر الیکشن لڑنا ہوگا، شاندانہ گلزار کو پیالہ اور مہر بانو قریشی کو چمٹا کا انتخابی نشان دیا گیا ہے۔

ملتان سے زین قریشی کو جوتے، ڈاکٹر ریاض لانگ کو راکٹ، لاہور سے عالیہ حمزہ ملک کو ڈائس ، بھکر سے ثنا اللہ خان مستی خیل کو لیٹربکس کا نشان مل گیا۔

پرویزالہی کی اہلیہ قیصرہ الہی فریج کے نشان پر الیکشن لڑیں گی، ملتان سے ہی عامر ڈوگر کو کلاک کا انتخابی نشان مل گیا، عرفان اللہ خان نیازی کو گھڑیال کا نشان ملا ہے۔

تحریک انصاف کے امیدوار این اے 107 سے مہر ریاض فتیانہ کو کرسی، پی پی 123 آشفہ ریاض فتیانہ اور پی پی 124سے سیدہ سونیا علی رضا شاہ کو پیالہ کا نشان الاٹ کیا گیا۔

این اے 122 سے تحریک انصاف کے اظہر صدیق کو میڈل جبکہ لطیف کھوسہ کو الفابیٹ (K) کا انتخابی نشان الاٹ مل گیا جبکہ این اے 123 سے پی ٹی آئی امیدوار افضال عظیم پاہٹ کو ریڈیو کا نشان الاٹ کیا گیا ہے این اے 124 سیپی ٹی آئی امیدوار سردار عظیم اللہ کو گھڑی اور ضمیر احمد کو ڈولفن کا نشان الاٹ کیا گیا جبکہ این اے 125 سے پی ٹی آئی امیدوار جمیل اصغر بھٹی کو ڈھول کا نشان مل گیا۔

این اے 128 سے پی ٹی آئی کے سلمان اکرم راجہ کو ریکٹ کا نشان الاٹ کیا گیا جبکہ این اے 129 سے پی ٹی آئی امیدوار میاں اظہر کرکٹ سٹمپ کے نشان پر الیکشن لڑیں گے۔

واضح رہے کہ گزشتہ شب سپریم کورٹ نے الیکشن کمیشن کا فیصلہ درست اور پشاور ہائی کورٹ کا فیصلہ کالعدم قرار دے دیا، جس کے بعد پی ٹی آئی بلے کے انتخابی نشان سے محروم ہوگئی ہے۔