تازہ ترین

نواز شریف اور ان کے اہل خانہ کیخلاف نیب انویسٹی گیشن بند

اسلام آباد – نیب کی جانب سے نواز شریف اور ان کے اہل خانہ کے خلاف شریف ٹرسٹ کیس میں انویسٹی گیشن بند کردی گئی۔

قومی احتساب بیورو (نیب) نے یکم جنوری کو ہونے والے ایگزیکٹو بورڈ کے اجلاس میں مسلم لیگ ن کے قائد و سابق وزیرعظم نواز شریف اور ان کے اہل خانہ کے خلاف شریف ٹرسٹ کیس کی انویسٹی گیشن سمیت 5 انکوائریاں بند کرنے کی منظوری دے دی۔

اجلاس میں جن انکوائریوں کو بند کرنے کی منظوری دی گئی ان میں پنجاب سیف سٹی اتھارٹی، سوشل ایکشن پروگرام، پارک انکلیو و دیگر شامل ہیں۔ یکم جنوری 2024ء کو منظوری دیے جانے کے بعد نواز شریف اور ان کے اہل خانہ کے ارکان کے خلاف شریف ٹرسٹ کیس کی انویسٹی گیشن بھی بند کردی گئی ہے۔

ایگزیکٹوبورڈ اجلاس میں بتایا گیا کہ شریف ٹرسٹ کیس میں انویسٹی گیشن کی منظوری 31 مارچ 2000ء کے بعد سے جاری تھی ، جس میں الزام تھا کہ شریف خاندان نے ٹرسٹ کے نام پر بے نامی جائیداد بنائی اور ٹرسٹ کے اکاؤنٹس میں خورد برد کی گئی اورآڈٹ بھی نہیں کرایاگیا ۔

علاوہ ازیں شریف ٹرسٹ کیس میں شریف فیملی پر الزام تھا کہ کروڑوں روپے ٹرسٹ کے نام پر خفیہ طور پر وصول کیے گئے۔

اجلاس میں منظوری کے بعد نیب نے ترمیم شدہ ایکٹ 2022ء کی سیکشن 31بی کے تحت شریف ٹرسٹ کیس کی انویسٹی گیشن بندکردی۔