تازہ ترین

سائفر کیس: عمران خان اور شاہ محمود قریشی پر فرد جرم عائد

راولپنڈی – سائفر کیس میں سابق وزیراعظم اور سابق چیئرمین پی ٹی آئی عمران خان سمیت سابق وفاقی وزیر شاہ محمود قریشی پر فرد جرم عائد کردی گئی۔

آفیشل سیکرٹ ایکٹ کی خصوصی عدالت میں سائفر کیس کی سماعت ہوئی، بانی چیئرمین پی ٹی آئی اور شاہ محمود قریشی عدالت میں پیش ہوئے، عدالت نے چالان پڑھا کر سنایا، عدالت نے کہا کہ تین الزامات کے تحت فرد جرم عائد کی گئی ، سائفر کو جلسہ میں لہرایاگیا اور اس کے مندرجات کوزیر بحث لایاگیا ، بطور وزیراعظم اور بطور وزیر خارجہ سائفر کو وزارت خارجہ کو واپس نہ بھیجا گیا ، سائفرکو جان بوجھ کر استعمال کرکے ملکی تشخص اور سلامتی کو نقصان پہنچا ۔

فرد جرم خصوصی عدالت کے جج ابوالحسنات ذوالقرنین نے سنائی جبکہ شاہ محمود قریشی اور بانی چیئرمین پی ٹی آئی نے صحتِ جرم سے انکار کردیا۔

فرد جرم سنتے ہی سابق چئیرمین پی ٹی آئی نے جج سے کہا کہ میں نے ملکی اور غیر ملکی اسٹیبلشمنٹ کو بے نقاب کرکے ظلم کیا میرے جرم میں یہ بھی شامل کریں،انہوں نے سائفر کو جنرل باجوہ اور امریکی سفیر ڈونلڈ لو کی سازش قرار دیتے ہوئے کہا کہ ہماری حکومت گرا کر ہمیں ہی ملزم بنادیا گیا، یہ کیسے ہوسکتا ہے جس کی حکومت گری ہو وہی ملزم ہو۔ جج نے انہیں ٹوکتے ہوئے کہا کہ آپ ایسا نہ کریں، غلط بات نہ کریں، یہ عدالت ہے، آپ کا لہجہ مناسب نہیں، آپ پہلے میری بات سن لیں۔

عمران خان کے بار بار بولنے پر عدالت نے انہیں خاموش کرادیا۔ ایف آئی اے کے سپیشل پراسیکیوٹرز شاہ خاور اور ذوالفقار عباس نقوی جبکہ بانی پی ٹی آئی کے وکیل عثمان گل اور شاہ محمود قریشی کے وکیل بیرسٹر تیمور ملک بھی عدالت میں پیش ہوئے ، سائفر کیس کی سماعت جمعرات تک ملتوی کردی گئی ۔