تازہ ترین

اسرائیل کو تسلیم کرنے کی جھک ماری جا رہی، اجازت نہیں دینگے، فضل الرحمان

اسلام آباد – جمعیت علمائے اسلام کے سربراہ مولانا فضل الرحمان نے کہا ہے کہ اسرائیل کو تسلیم کرنے کی جھک ماری جا رہی ہے، اپنے اور اسلامی حکمرانوں کو واضح کرتے ہیں اسرائیل کو تسلیم کرنے کی اجازت نہیں دیں گے۔

فلسطین کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے مولانا فضل الرحمان نے کہا کہ اسرائیل فلسطین پرقابض ہے، غزہ پراسرائیلی مظالم کی مذمت کرتے ہیں، ہم نے اسرائیل کو کبھی تسلیم نہیں کیا، بانیان پاکستان نے اسرائیل کو ناجائز بچہ قرار دیا۔

سربراہ جے یو آئی (ف) نے کہا کہ ہم نے پاکستان کی سرزمین پر اسرائیل کے ایجنڈے کو شکست دی ہے، ہم فلسطینی بھائیوں کے ساتھ کھڑے ہیں، امریکا تم نے جاپان پر ایٹم بم برسایا، تم کیسے انصاف کی بات کر سکتے ہو، اب دنیا میں فلسطین کی آزادی کی بات ہو رہی ہے۔

مولانا فضل الرحمان نے کہا کہ بیت المقدس ہمارا ہے، ہم نے بیت المقدس کو آزاد کرانا ہے، جمہوریت کے علمبردار فلسطین میں انسانیت کا احترام نہیں کر رہے، عالمی ادارے فلسطینیوں کے حقوق کا احترام کریں، اسلامی دنیا فلسطین کی مالی مدد کرے۔

انہوں نے کہا کہ اگر حکمران، اسلامی ممالک اسرائیل کو تسلیم کریں گے توعوام ان کے خلاف بغاوت کریں گے، اس کانفرنس کو تسلسل دینے کے لیے ایک اور اجلاس بلایا جائے، 8 دسمبر پورے ملک یوم اقصیٰ کے طور پر منایا جائے۔