تازہ ترین

بی جے پی نے سابق ٹیچر اور قبائلی خاتون رہنما کو بھارتی صدر کا امیدوار نامزد کردیا

اسلام آباد (سن نیوز)بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) نے قبائلی خاتون سیاستدان دروپدی مرموکو بھارتی صدارتی امیدوار نامزد کردیا۔میڈیا رپورٹس کے مطابق 64 سالہ دروپدی مرمو کا تعلق ریاست اڑیسہ سے ہے اور وہ کئی دہائیوں سے بی جے پی کا حصہ ہیں جب کہ وہ ریاستی گورنر کے طور پر فرائض انجام دے چکی ہیں۔ دروپدی مرمو سابق ٹیچر ہیں اور اگر وہ بھارت کی صدر منتخب ہوتی ہیں تو وہ اس عہدے پر فائز ہونے والی پہلی قبائلی رہنما ہوں گی۔بھارتی وزیراعظم نریندر مودی کا کہنا ہے انہیں یقین ہےکہ دروپدی بھارت کی بہترین صدر ہوں گی۔بی جے پی کی پارلیمانی پارٹی نے صدر کے امیدوار کے لیے 20 ناموں کا جائزہ لیا جس کے بعد دروپدی کے نام کا اعلان کیا گیا ہے۔دروپدی کا کہنا ہےکہ انہیں ٹی وی کے ذریعے اپنی نامزدگی کا علم ہوا جس پر وہ بے انتہا خوش ہیں۔بھارت میں صدارتی الیکشن 18 جولائی کو ہوں گے جس کے نتائج کا اعلان 21 جولائی کو ہوگا اور الیکشن میں کامیاب امیدوار موجودہ صدر رام ناتھ کووند کی جگہ لے گا۔بھارت کے موجودہ صدر رام ناتھ کووند کی مدت 24 جولائی کو ختم ہورہی ہے۔

 

اس وقت سب سے زیادہ مقبول خبریں