تازہ ترین

پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافہ کرنا حکومت کو مہنگا پڑنے لگا۔۔ بڑی عدالت سے بڑی خبر گئی

لاہور(نیوز ڈیسک) پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافے کو لاہور ہائیکورٹ میں چیلنج کر دیا گیا۔ درخواست میں اوگرا، وفاقی حکومت سمیت دیگر کو فریق بنایا گیا۔درخواست گزار نے موقف اپنایا کہ پٹرولیم مصنوعات
کی قیمتوں میں اضافہ غیر قانونی ہے، پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں کابینہ کی منظوری کے بغیر کیا گیا۔خیال رہے وفاقی حکومت نے رات گئے پٹرول کی قیمت میں 8 روپے 3 پیسے فی لٹر اضافہ کا نوٹیفکیشن جاری کیا، جس کے بعد پٹرول کی نئی قیمت 145 روپے 82 پیسے فی لٹر ہوگئی۔ ہائی اسپیڈ ڈیزل کی قیمت میں 8 روپے 14 پیسے فی لٹر اضافے کے بعد نئی قیمت 142 روپے 62 پیسے فی لٹر مقرر کی گئی۔لائٹ ڈیزل کی قیمت میں 5 روپے 72 پیسے فی لٹراضافہ کیا گیا۔ لائٹ ڈیزل کی نئی قیمت 114 روپے 7 پیسے فی لٹر ہوگئی۔ اسی طرح مٹی کے تیل کی قیمت میں 6 روپے 27 پیسے فی لٹر کا اضافہ کیا گیا، جس کے بعد مٹی کے تیل کی قیمت 116 روپے 53 پیسے فی لٹر ہوگئی۔

اس وقت سب سے زیادہ مقبول خبریں